موجودہ قومی چیمپئن، جونیئر اور سینئر قومی ریکارڈ ہولڈرز کھلاڑیوں کے ساتھ ناروا سلوک

حکومتی اداروں کی عدم توجہ کے باعث ایسے واقعات بھی المیہ بن جاتے ہیں کہ سر شرم سے جھک جاتے ہیں، ان میں ایک مثال پنجاب کے دارالحکومت لاہور سے تعلق رکھنے والے فرحان ایوب کا کہنا ہے کہ انہوں نے 21 ایسے ورلڈ ریکارڈ توڑ ڈالے ہیں جو گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈز میں درج تھے۔ میں انہوں نے بتایا کہ وہ اب تک بھارت، امریکہ اور جاپان سمیت سات ممالک کے 21 ریکارڈز توڑ چکے ہیں جن میں مارشل آرٹس اور بریک ڈانس کے سٹیپس کے ریکارڈ شامل ہیں۔ انہوں نے اس کے ساتھ ساتھ چیلنجنگ کیٹیگری کے ورلڈ ریکارڈ بھی بریک کیے ہیں۔ لیکن افسوس کہ عالمی سطح پر پاکستان کا نام روشن کرنے والا یہ ٹیلینٹڈ نوجوان اپنی غربت سے مجبور ہو کر صرف 300 روپے میں اپنی قومی شرٹس بیچنے پر مجبور ہوا کیونکہ میرٹ پر ہونے کے باوجود اس کے پاس کوئی روزگار نہیں۔ فرحان کئی بار حکومتی شخصیات سے مل چکے ہیں لیکن کسی نے بھی ان کی داد رسی نہ کی۔

SEE NOMINATION →
امریکہ میں ٹرک چلانے والا پاکستانی فائٹنگ چیمپیئن کیسے بنا؟

آسٹریلیا جانے کی کوشش کے دوران پاپوا نیو گنی کے بدنام زمانہ مانوس کیمپ میں پانچ سال گزارنے والے عزت اللہ کاکڑ گذشتہ سال امریکہ میں پناہ ملنے کے بعد زندگی کا پہیہ چلانے کے لیے ٹرک ڈرائیور کی نوکری کر رہے ہیں۔ وہ ریاست کیلیفورنیا کی سڑک پر ٹرک چلا رہے تھے جب انہیں بیرناکل فائٹنگ چیمپیئن شپ میں مقابلہ لڑنے کی پیشکش ہوئی۔ سابق ورلڈ ِکک باکسنگ رنر اپ چیمپیئن اور پاکستان کک باکسنگ چیمپیئن رہنے والے 29 سالہ عزت اللہ کاکڑ کے پاس شاید اپنے خوابوں کی تکمیل اور خود کو ثابت کرنے کے لیے یہ آخری موقع تھا۔ لیکن مقابلے سے صرف دو ہفتے پہلے ان کا کندھا اتر گیا۔ اس کے باوجود عزت اللہ کاکڑ نے زخمی کندھے کے ساتھ دستانوں اور حفاظتی گیئرز کے بغیر کھیلے جانے والی مُکوں کی لڑائی کے خطرناک کھیل بیرناکل فائٹنگ چیمپیئن شپ (بی کے ایف سی ) کے مقابلے میں امریکی حریف کو صرف 33 سیکنڈ میں ناک آوٹ کر کے اپنے کیرئیر کا دوبارہ پراعتماد اور حیران کن آغاز کیا۔

SEE NOMINATION →
بین الاقوامی کھیلوں کی بحالی میں ایک اور قدم۔۔۔! نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کا 18سال بعددورہ پاکستان

آئی سی سی ورلڈ ٹیسٹ چیمپئن شپ کی فاتح نیو زی لینڈ کی ٹیم 11ستمبر2021 سے 18 سال بعد پاکستان کا دورہ کرے گی۔ کورونا سے متاثرہ اس ماحول میں یہ دورہ بین الاقوامی کھیلوں کی بحالی میں ایک اور قدم ہے جس کا نہ صرف پاکستان کرکٹ بورڈ بلکہ پاکستان اسپورٹس بورڈ اور دیگر اسپورٹس فیڈریشنز خیر مقدم کرتے ہیں۔دوسری جانب چیف ایگزیکٹو نیوزی لینڈ کرکٹ ڈیوڈ وائیٹ نے بھی اس دورے پر نیک تمناﺅں اورخوشی کا اظہار کیا ۔ اس دوران مہمان ٹیم آئی سی سی مینز کرکٹ ورلڈکپ سپر لیگ میں شامل 3ون ڈے انٹرنیشنل میچز اور5 ٹی ٹونٹی انٹرنیشنل میچز کھیلے گی۔دونوں ٹیموں کے مابین ون ڈے انٹرنیشنل سیریز میں شامل تینوں میچز راولپنڈی میں 17، 19 اور 21 ستمبر کو کھیلے جائیں گے جبکہ سیریز میں شامل تمام پانچ ٹی ٹونٹی انٹرنیشنل میچز لاہور میں کھیلے جائیں گے، جو کہ 25 ستمبر سے 3 اکتوبر تک ہوں گے۔20219 سے جاری کورونا وائرس کی وبا کے دوران کھیلوں کی سرگرمیاں بحا ل ہونا بڑی کامیابی ہے اور ان سرگرمیوں کابرقرار رہنا جوئے شیر لانے کے مترادف ہیں۔چیف ایگزیکٹو نیوزی لینڈ کرکٹ ڈیوڈ وائیٹ نے کہاہے کہ ہم پاکستان کے ہوم انٹرنیشنل سیزن کے آغاز میں پاکستان کا دوبارہ دورہ کرنے کے منتظر ہیں۔

SEE NOMINATION →
افغانستان میں غیر یقینی صورتحال،خطہ میںشیڈول کھیلوں کے مقابلوں پرالتوا کے سائے منڈلانے لگے طالبان کی افغانستان کرکٹ ٹیم کو کھیلنے کی اجازت ، اسپورٹس حلقوں کا خیر مقدم

افغانستان سے امریکی فوج کے انخلا اور طالبان کے کابل سمیت ملک کے بیشتر شہروں کا کنٹرول سنبھالنے کے بعد پیدا ہونے والی تشویشناک اور غیر یقینی صورت حال سے خطہ میں جہاں دیگر عوامل متاثر ہوئے ہیں وہیں پر پاکستان ، یو اے ای، عمان سمیت خطہ میں شیڈول کرکٹ و دیگر اسپورٹس ایونٹس پر التوا کے سائے منڈلانے لگے ہیں۔آیا کورونا وائرس کی وبا کے بعد موجودہ صورتحال میں ٹورنا منٹس و ایونٹس کا انعقاد ممکن ہوگا یا نہیں؟ تاہم طالبان نے افغانستان کی قومی کرکٹ ٹیم کو کھیلنے کی اجازت دیتے ہوئے کہا ہے کہ کرکٹ سے کوئی مسئلہ نہیں اور وہ افغانستان کی مردوں کی کرکٹ ٹیم اور بورڈکے امور میں مداخلت نہیں کریں گے۔ طالبان کے اس فیصلہ کا کرکٹ سمیت اسپورٹس حلقوں نے خیر مقدم کیا ہے اور توقع کی ہے کہ طالبان کھیلوں کی سرگرمیاں جاری رکھیں گے۔ افغانستان کرکٹ بورڈ کے میڈیا آپریشنز کے سربراہ حکمت حسن نے کہا کہ طالبان کو کرکٹ سے کوئی مسئلہ نہیں ہے۔

SEE NOMINATION →